حج کا طریقہ

مناسکِ حج پر ایک نظر

مناسکِ حج پر ایک نظر

مکہ سے منیٰ روانگی، منیٰ میں ظہر،عصر، مغرب، عشاء پڑھنی ہیں ،
رات منیٰ میں قیام کرنا ہے
حج کا پہلا دن
8 ذو الحجہ
فجر کی نماز منیٰ میں ادا کر کے عرفات کو روانگی، ظہراورعصر کی نمازیں عرفات میں پڑھنی ہوگی، وقوفِ عرفات ہوگا، غروب آفتاب کے بعد مغرب کی نماز پڑھے بغیر مزدلفہ کو روانگی، مغرب اور عشاء کی نمازیں عشاء کے وقت مزدلفہ میں ادا کرنی ہیں اور مزدلفہ میں قیام کرنا ہے حج کا دوسرا دن

9ذو الحجہ
مزدلفہ میں فجر کی نماز کے بعد وقوف مزدلفہ اور منیٰ روانگی ،بڑے جمرہ کو کنکریاں مارنا، قربانی کرنا، سر کے بال منڈوانا یا کتروانا ، احرام کھول دینا، طوافِ زیارت، سعی،رات منیٰ میں قیام حج کا تیسرا دن

10ذو الحجہ
زوال کے بعدمنیٰ میں چھوٹے ، درمیانے اور بڑے جمرہ کو بالترتیب کنکریاں مارنا ۔ طوافِ زیارت اگر کل نہیں کیا تھا تو آج کر لیں ، رات منیٰ میں قیام حج کا چوتھا دن

11ذو الحجہ
زوال کے بعدمنیٰ میں چھوٹے ، درمیانے اور بڑے جمرہ کو بالترتیب کنکریاں مارنا ۔ طوافِ زیارت اگر نہیں کیا تھا تو آج غروب آفتاب سے پہلے ضرور کر لیں ۔ غروبِ آفتاب سے پہلے منیٰ چھوڑ دیں ۔ اگر فجر تک منیٰ میں ہی مقیم رے تو 13ذی الحجہ کی رمی کر کے مکہ مکرمہ آجائیں ۔ حج کا پانچواں دن

12ذو الحجہ